حملہ

کابل پارلیمنٹ بلڈنگ کے قریب حملہ

کراچی (بے لاگ ) کابل کے سکیورٹی حکام کے مطابق افغان پارلیمنٹ کے قریب دہرے دھماکوں میں کم از کم 30 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے ہیں۔
کابل ہسپتال کے سربراہ سلیم رسولی نے کہا ان کے پاس آنے والی اطلاعات کے مطابق اس واقعے میں کم از کم 30 افراد ہلاک اور 30 سے زیادہ زخمی ہو گئے ہیں۔ زخمیوں کو استقلال ہسپتال اور دوسرے ہنگامی ہسپتالوں میں لے جایا گیا ہے۔ہلاک ہونے والوں کی اکثریت عام شہریوں پر مشتمل ہے۔
یہ حملہ اس وقت ہوا جب عملہ چھٹی کے وقت عمارت سے باہر نکل رہا تھا اور اس وقت وہاں خاصی بھیڑ تھی۔
اطلاعات کے مطابق کار بم اور خود کش حملہ آور کا ایک ساتھ دھماکہ ہوا۔
ہلاک ہونے والوں میں افغانستان کی مرکزی انٹیلی جنس ایجنسی نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکیورٹی کے مقامی سربراہ شامل ہیں. یہ حالیہ مہینوں میں کابل میں ہونے والا سب سے مہلک حملہ ہے۔

اگر آپ کو تحریر پسند آئی ہے تو اپنے احباب کے ساتھ بھی شئیر کریں!

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں